dmc1

الخدمت فاونڈیشن نے ہمیشہ اعلٰی سطح پر چیلنج سے نمٹنے کیلئے ہنگامی حالات میں احسن طریقے سے اپنا کردار ادا کیا ہے۔

ضروریات کے پیشِ نظر اور مطلوبہ انسانی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے الخدمت فاونڈیشن نے تباہی سے نمٹنے کیلئے انتظامی امور کو مزید تین حصوں میں تقسیم کیا ہے۔

1 ۔ ریسکیو

2 ۔ ریلیف

3 ۔ بحالی

لہذا بہتر طور پر نگرانی کیلئے الخدمت ڈیزاسٹر مینجمنٹ یونٹس جو کہ مقامی طور پر قائم کئے گئے ہیں، براہ راست الخدمت فاونڈیشن کی نگرانی میں ہوتے ہیں۔ جبکہ الخدمت ڈیزاسٹر مینجمنٹ یونٹس تمام حفا ظتی، امدای اور بحالی کے امور کو مقامی سطح پر کنٹرول کرتے ہیں۔

ریسکیو – ٹریفک حادثات میں زخمی اور مردہ افراد کو باہر نکالنے، ان کو ابتدائی طبی امداد فراہم کرنے، اور اسی طرح مختلف دیہاتوں اور شہروں سے مریضوں کو ہسپتال پہنچایا جاتا ہے۔

ریلیف –  متاثرہ افراد کو کھانا، علاج اور ادویات کی فراہمی کی جاتی ہے۔ سرکاری اور غیر سرکاری بین الاقوامی این جی اوز کی مدد سے  2000 سے زائد الخدمت کے رضا کار 98540 کھانے کے تھیلوں کے ساتھ روزانہ 1500 افراد کو صاف پانی، کپڑے، ترپال، خیمے اور دیگر ضروری اشیا فراہم کرکے 10 کروڑ سے زائد متاثرین کو ریلیف دے چکے ہیں۔

بحالی – گھروں کی مرمت ، تمام ضروریات زندگی مہیا کرنے اور متاثر خاندانوں کی معمول کی زندگی کو دوبارہ شروع کرنے کیلئےاب تک 2069 سے زائد خاندانوں کوالخدمت فاونڈیشن نے گھر فراہم کیئے ہیں ۔

رضاکاروں کی تربیت:

الخدمت ڈیزاسٹر مینجمنٹ یونٹس کیلئے رضاکاروں کی ‘ٹریننگ – “تھوڑا سا علم نقصان دہ ہے”  غیر تربیت یافتہ رضا کاروں کی بجائے ہم اپنے رضا کاروں کی تربیت پر سختی سے دھیان دیتے ہیں تاکہ ہر قسم کے نقصان کو کم کیا جا سکے۔

الخدمت فاونڈیشن کے آپریشنل دفاتر 9 لوکل مقامات  سندھ، پنجاب، بلوچستان، خیبر پختون خواہ، کشمیر، کراچی، اسلام آباد، فاٹا اور گلگت بلتستان میں پھیلے ہوئے ہیں۔

قدرتی آفات سے نمٹنے والی انتظامیہ میں رضا کار اہم کردار ادا کرتے ہیں۔  بچاو اور امدادی کاموں میں ان کی تربیت اور صلاحیت کو مزید بہتر بنانے کیلئے ان کی نگرانی کی جاتی ہے۔  الخدمت فاونڈیشن اس بات سے اچھی طرح واقف کہ رضا کاروں کی تربیت کتنی ضروری ہے اور اس لئے وہ ان کی تربیت پر زور دیتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ عام طور پر نازک حالات اور قدرتی آفات سے نمٹنے کیلئے الخدمت فاونڈیشن کے رضا کار ہر وقت تیار رہتے ہیں۔

قدرتی آفات سے نمٹنے والی انتظامیہ کی ضروریات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے الخدمت فاونڈیشن نے خیبر پختون خواہ میں رضا کاروں کی بھرتی کا عمل شروع کر دیا ہے۔ ان رضا کاروں کو چارسدہ اور پشاور میں ٹریننگ دی جا رہی ہے۔ جبکہ ضلع پنجاب کے رضا کار تربیت حاصل کرنے کیلئے راولپنڈی، ملتان اور لیہ میں  تربیتی مشقوں میں شامل ہو سکتے ہیں۔ صوبہ سندھ کے رضا کاروں کو ٹھٹھہ میں تربیت دی جارہی ہے۔
الخدمت نے 9 علاقوں میں اپنی سرگرمیں کو تقسیم کیا ہے جن میں سندھ، پنجاب، بلوچستان، خیبر پختونخوا، کشمیر، کراچی، اسلام آباد، فاٹا اور گلگت بلتستان شامل ہیں۔

disaster-management2

ِ

رضاکاروں کی تربیت

الخدمت نے 9 علاقوں میں اپنی سرگرمیں کو تقسیم کیا ہے جن میں سندھ، پنجاب، بلوچستان، خیبر پختونخوا، کشمیر، کراچی، اسلام آباد، فاٹا شامل ہیں

قدرتی آفات سے نمٹنے والی انتظامیہ میں رضا کار اہم کردار ادا کرتے ہیں۔  بچاو اور امدادی کاموں میں ان کی تربیت اور صلاحیت کو مزید بہتر بنانے کیلئے ان کی نگرانی کی جاتی ہے۔  الخدمت فاونڈیشن اس بات سے اچھی طرح واقف کہ رضا کاروں کی تربیت کتنی ضروری ہے اور اس لئے وہ ان کی تربیت پر زور دیتی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ عام طور پر نازک حالات اور قدرتی آفات سے نمٹنے کیلئے الخدمت فاونڈیشن کے رضا کار ہر وقت تیار رہتے ہیں۔

قدرتی آفات سے نمٹنے والی انتظامیہ کی ضروریات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے الخدمت فاونڈیشن نے خیبر پختون خواہ میں رضا کاروں کی بھرتی کا عمل شروع کر دیا ہے۔ ان رضا کاروں کو چارسدہ اور پشاور میں ٹریننگ دی جا رہی ہے۔ جبکہ ضلع پنجاب کے رضا کار تربیت حاصل کرنے کیلئے راولپنڈی، ملتان اور لیہ میں  تربیتی مشقوں میں شامل ہو سکتے ہیں۔ صوبہ سندھ کے رضا کاروں کو ٹھٹھہ میں تربیت دی جارہی ہے۔

خیبر پختون خواہ میں آفات سے بچاو کا تربیتی پروگرام

Peshawar12